The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

sسی سی پی او لاہور کا کارنامہ،پولیس کے کڑے احتساب کا آغاز … %نجی ٹارچر سیل میں شہریوں کو غیر قانونی حراست میں رکھنے پر انسپکٹر سمیت4پولیس اہلکار گرفتار،مقدمہ درج

14

%نجی ٹارچر سیل میں شہریوں کو غیر قانونی حراست میں رکھنے پر انسپکٹر سمیت4پولیس اہلکار گرفتار،مقدمہ درج

پیر ستمبر
23:50

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – آن لائن۔ 14 ستمبر2020ء) سی سی پی او لاہور کا کارنامہ،پولیس کے کڑے احتساب کا آغاز کردیاگیا،نجی ٹارچر سیل میں شہریوں کو غیر قانونی حراست میں رکھنے پر انسپکٹر سمیت4پولیس اہلکار گرفتار،مقدمہ درج کرکے ملزمان کو حوالات میں بند کردیاگیا،سخت سزائیں تجویز،تھانہ گوجر پورہ انسپکٹر رضا جعفری کی خودکشی کی دھمکی،سی سی پی او نے سخت سزائیں دیں ،ریلیف نہ ملا تو خود سوزی کرلوں گا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق نجی ٹارچر سیل میں شہریوں کو غیر قانونی حراست میں رکھنے کے الزام میں سی سی پی او لاہورعمر شیخ نے 4تھانیداروں کو حوالات میں بند کرنے کے احکامات جاری کردئیے۔چاروں اہلکاروں کو حوالات میں بند کردیاگیا ہے،جن میں انسپکٹر رضا،اے ایس آئی عمران،شہزاد اور عمران شامل ہیں،ان اہلکاروں کے تشدد سے امجد ذوالفقار نامی شہری ہلاک ہوا تھا۔

(جاری ہے)

تفصیلات کے مطابق ایک سال قبل گوجرپورہ کے علاقے میں نجی ٹارچر سیل کا انکشاف ہوا تھا،ایس ایچ او رضا جعفری کو معطل کرنے انکوائری کا حکم دیاگیا تھا۔انکوائری افسر نے پولیس اہلکاروں کے خلاف رپورٹ دی تھی لیکن کارروائی عمل میں نہیں لائی جاسکی تھی۔سی سی پی او لاہور عمر شیخ نے انکوائری کو کھلوا کر اہلکاروں کو سخت سزائیں دینے کی سفارش کی ہے۔اس حوالے سے انسپکٹر رضا جعفری نے اپنا مؤقف پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ سی سی پی او نے ہمیں سخت سزائیں دی ہیں،اگر ریلیف نہ ملا تو دفتر کے باہر خودسوزی کرلوںگا۔دوران حراست ہلاک ہونے والے شخص کی میڈیکل رپورٹ اور پوسٹ مارٹم کے مطابق موت ہارٹ اٹیک سے ہوئی تھی۔

متعلقہ عنوان :

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More