The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

ہالینڈ کے موجد نے مرنے کے بعد لاشوں کو کھاد میں تبدل کرنے والے تابوت تیار کر لئے

6

جمعرات ستمبر
11:43

ایمسٹر ڈیم (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – اے پی پی۔ 17 ستمبر2020ء) ہالینڈ کے موجد نے مشروم کا استعمال کرتے ہوئے ایسے تابوت تیار کئے ہیں جو مرنے کے بعد لاشوں کو چند سالوں میں کھاد میں تبدل کردیتے ہیں۔

(جاری ہے)

فرانسیسی ذرائع ابلاغ کے مطابق میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے تابوتوں کے موجد باب ہینڈرکس نے بتایا کہ مذکورہ تابوتوں کو مشروم ،مسییلیئم اور فنگس کی جڑوں سے تیار کیا گیا ہے جو 30 سے 45 دنوں کے اندر خود بخود کھاد میں تبدیل ہو جاتا ہے جبکہ اس کے اند ر دفنائی گئی لاش بھی چند سالوں کے اندر اندر کھاد میں تبدیل ہو جائے گی۔

باب ہینڈرکس نے کہا کہ سب سے پہلے اس قسم کے تابوت ڈیلٹ ٹیکنیکل یونیورسٹی کی لیبارٹری میں تیار کرنے کے تجربات کئے گئے تھے۔باب ہینڈرکس نے کہاکہ گزشتہ ہفتے ہالینڈ میں ایک 82 سالہ خاتون کو اس تابوت میں دفن کیا گیا ہے جس کے بارے میں توقع کی جارہی ہے کہ اس کا جسم دو سے تین سالوں میں گل جائے گا۔اس کی نسبت اگر درخت کی لکڑ اور دھات سے تیار کئے گئے روایتی تابوت میں لاش کے گلنے کے عمل میں عام طور پر دس سال سے زیادہ کا وقت لگتا ہے ۔

متعلقہ عنوان :

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More