The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

کورونا وائرس کی وبائی ایمرجنسی صورتحال کے بعد صوبے کے تمام کالجز میں (آج) سے تعلیمی سرگرمیاں شروع کرنے جا رہے ہیں، تمام ایس او پیز کو ملحوظ خاطر رکھتے ہوئے بلوچستان اکیڈمی … مزید

14

پیر ستمبر
22:35

کوئٹہ۔11ستمبر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – اے پی پی۔ 14 ستمبر2020ء) بلوچستان اکیڈمی برائے کالج اساتذہ (BACT) کے سر براہ پروفیسر سعد اللہ توخئی نے بیکٹ کے تعلیمی سرگرمیوں کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ صوبائی محکمہ ہائر ایجوکیشن کے سیکرٹری ہاشم خان غلزئی کی سربراہی میں کورونا وائرس کی وبائی ایمرجنسی صورتحال کے بعد صوبے کے تمام کالجز میں 15 ستمبر سے تعلیمی سرگرمیوں شروع کرنے جا رہی ہے، جس کے لیے تمام ایس او پیز کو ملحوظ خاطر رکھتے ہوئے بلوچستان اکیڈمی برائے کالج اساتذہ نے سمارٹ سلیبس تشکیل دی ہے جس میں ڈائریکٹر کالجز، چیرمین بلوچستان بورڈ آف انٹرمیڈیٹ اینڈ سیکنڈری ایجوکیشن، اور دیگر اعلیٰ حکام جو کہ اس کے ممبرز ہیں شامل ہیں جس کی سربراہی میں کر رہا ہوں۔ پروفیسر سعد اللہ توخئی نے کہا کہ سمارٹ سلیبس بورڈ نے ایک جامع پلان مرتب کیا ہے جس کے تحت پہلے مرحلے میں پانچ دن تک صوبے کے تمام اضلاع سے 250 سے زائد اساتذہ کو 32 مختلف مضامین میں گرلز کینٹ کالج کوئیٹہ میں اس حوالے سے ٹریننگ دی گئی ہے، علاوہ ازیں 32 مضامین کے لیے 32کمیٹیاں بھی تشکیل دی گئی ہیں جس کے لیے کمیٹی میں تقریباً 32 کمیٹیوں میں بڑے مضامین کو پڑھانے کے لیے 10 اساتذہ جبکہ چھوٹے مضامین کو پڑھانے کے لیے 4سے 15 اساتذہ اپنی خدمات سر انجام دیں گے۔

(جاری ہے)

انہوں نے بتایا کہ بلوچستان اکیڈمی برائے کالج اساتذہ صبح جو کہ ماہرین کی نگرانی میں نئے تعلیمی سال میں سمارٹ ضلع بورڈ کے تحت تعلیمی سال شروع کرنے جا رہی ہے جس کے تحت 15 ستمبر 2019 کو تعلیمی سال کا اجرا ہو جائے گا جو کہ مارچ سے انحطاط کا شکار تھی۔ انہوں نے بتایا کہ آئندہ سال یکم مارچ تک موسم سرما کی تعلیمی سرگرمیوں کے لیے مجموعی 104 ایام دستیاب ہونگے، جبکہ موسم گرما کے تعلیمی اداروں میں 158ایام دستیاب ہو سکیں گے۔ انہوں بتایا کہ کہ اس حوالے سے سے ماہرین کی نگرانی میں میں پروفارما بنائے گئے ہیں ہیں جبکہ سمارٹ سلیبس جو کہ سولہ سو صفحات پر مشتمل ہے جس میں تمام ایام کی مختلف مضامین کو پڑھانے سمیت دیگر امور کا تفصیلی احاطہ کیا گیا ہے ہے جبکہ کہ اس پروفارمہ کو تمام کالجز میں تقسیم کر دیا گیا ہے، انہوں نے بتایا کہ کہ اس اس کورس میں کا مرض اور اور پولی ٹیکنیک کے کورسز کو شامل کیا گیا ہے، انہوں نے بتایا کہ پورے بلوچستان کے دائیں سو اساتذہ کو کرونا وائرس کے اسپیس کے حوالے سے بھی تربیت فراہم کی جاچکی ہے۔

متعلقہ عنوان :

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More