The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

ڈیرہ مراد جمالی نوتال منجھوشوری میں مہنگائی کا طوفان امڈ آیا، سبزیاں پھل فروٹ غریب شہری کے کھانے کے دسترس سے باہر ہوگئیں

13

اتوار اکتوبر
15:50

نصیرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 18 اکتوبر2020ء) ڈیرہ مراد جمالی نوتال منجھوشوری میں مہنگائی کا طوفان امڈ آیا، سبزیاں پھل فروٹ غریب شہری کے کھانے کے دسترس سے باہر ہوگئیں ، شہریوں کا کہنا ہے کہ سبزیوں کی قیمتیں اتنی بڑھ چکی ہیں کہ ایک وقت کی سبزی کے لئے تین سے چار سو روپے خرچ کرنے پڑتے ہیں بڑھتی ہوئی مہنگائی نے غریب عوام کو سوکھی روٹی کھانے پر مجبور کردیا پرائس کنٹرول کمیٹی کا کوئی وجود ہی نظر نہیں آرہا ضلعی انتظامیہ کو فوری طور پر سبزیوں کی بڑھتی ہوئی قیمتوں کو کنٹرول کرکے عوام کو ریلیف کی فراہمی کیلئے اقدامات کرنے کی اشد ضرورت ہے عوامی حلقوں کا مطالبہ ، سبزی کی بڑھتی ہوئی قیمتوں سے شہری عاجز آچکے ہیں ٹماٹر 200روپے ، کریلا 100روپے، بھنڈی 130 روپے ، پیاز 80روپے ، سبز مرچ 400روپے، کھیرا 100روپے ، توری 100روپے ، کدو90روپے اور ٹنڈا 80روپے کلو فروخت ہونے لگی جسکی وجہ سے دیہاڑی پر کام کرنے والے مزدوروں اور ملازم پیشہ افراد کے گھریلو مشکلات اور مسائل میں اضافہ ہوا ہے ۔

(جاری ہے)

شہریوں کا کہنا ہے کہ سبزی فروش اپنے مرضی کے مطابق سبزیوں کی قیمتوں کا تعین کرتے ہیں دوسری جانب انار 180روپے ، سیب 150روپے اور انگور 200روپے کلو فروکت کی جارہی ہے ڈیرہ مراد جمالی کے شہریوں نے بلوچستان عوامی پارٹی کے رکن صوبائی اسمبلی و پارلیمانی سیکریڑی بلوچستان ڈویلپمنٹ اتھارٹی میر سکندر خان عمرانی کمشنر نصیرآباد اور ڈپٹی کمشنر نصیرآباد سے مطالبہ کیا ہے کہ ڈیرہ مراد جمالی میں پرائس کنڑول کمیٹی کاقیام عمل میں لاتے ہوئے سبزیوں اور پھل فروٹ کے قیمتوں میں کمی لانے کے لئے اقدامات کئے جائیں تاکہ مہنگائی میں مبتلا عوام دو وقت کی سبزی کھانے سے محروم نہ ہوسکیں۔

متعلقہ عنوان :

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More