The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

موہالی میں ورلڈ کپ سیمی فائنل کی ناکامی کا دکھ ہمیشہ رہے گا، عمر گل … افسوس ہے بھارت کیخلاف اچھا پرفارم نہیں کرسکا، سابق فاسٹ باؤلر

22

لاہور (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار ۔ 18 اکتوبر 2020ء ) پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق فاسٹ بولر عمر گل نے کہا ہے کہ موہالی میں ورلڈ کپ 2011ء سیمی فائنل بھارت کے خلاف سیمی فائنل میں ناکامی کا دکھ ہے۔
عمر گل کا کہنا ہے کہ مجھے ہمیشہ افسوس رہے گا کہ اس میچ میں پرفارم نہیں کرسکا، سچن ٹنڈولکر کی وکٹ اگر جلد مل جاتی تو نتیجہ مختلف ہوتا۔
نجی ٹی وی کو انٹرویو میں 36 سالہ عمر گل نے کہا کہ ہم جیت سکتے تھے، پھر فائنل بھی ہم جیتتے، افسوس ہے کہ بھارت کیخلاف سیمی فائنل میں اچھا پرفارم نہیں کرسکا۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ اگر فرسٹ کلاس کرکٹ کو عزت نہ دی گئی تو پلیئرز ٹیسٹ کی بجائے صرف وائٹ بال میں دلچسپی لینے لگیں گے۔
سابق ٹیسٹ کرکٹر عمر گل نے کہا کہ میری خواہش تھی کہ فرسٹ کلاس کرکٹ میں 500 وکٹیں مکمل کرتا۔
عمر گل نے کہا کہ ہمیشہ سچ بات کہی، صحیح اور غلط پر سینئرز کی بھی پرواہ نہیں کی، ماضی میں حق بات پر سینئرز سے بھی لڑائی کی۔
سابق فاسٹ بولر نے کہا کہ ٹیم میں جگہ کے بجائے نظر ہمیشہ پہلے سے بہتر کرنے پر مرکوز رکھی، وہ لمحہ آج بھی یاد ہے جب پاکستان کے لیے ڈیبیو کیا۔                                                                                       

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More