The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

ملک میںسیاسی کشیدگی و محاذ آرائی کی موجو دہ ماحول قومی مفاد میں نہیں ‘محمد نثار خان … اس وقت باہمی اخوت و اسلامی بھا ئی چارے کی فضا میں بدلنے کی ضرورت ہے ‘ قائد خاکسار … مزید

12

اس وقت باہمی اخوت و اسلامی بھا ئی چارے کی فضا میں بدلنے کی ضرورت ہے ‘ قائد خاکسار تحریک پاکستان

اتوار اکتوبر
12:15

راولپنڈی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 18 اکتوبر2020ء) خا کسار تحریک پاکستان کے قائد محمد نثار خان نے کہا ہے کہ ایسے حالات جس میں وطن عزیز کو کئی مصائب و چیلنجوں کا سامنا ہے ملک میں سیاسی و محاز آرائی کا ماحول ملک و قوم کے مفاد میں نہیںاور اسے باہمی اخوت و اسلامی بھا ئی چارے میں بدلنے کی ضرورت ہے -انہوں نے کہا کہ قومی رہنمائوں کو سیاسی عمل و عوا می خدمات کے حوالے سے پالیسیوںپر مثبت تنقید کا راستہ اپنانا چاہیے تاکہ معمولات زندگی جاری رہنے میں کو ئی رکاوٹ پیدا نہ ہو – وہ راولپنڈی کے معروف خاکسار رہنما اللہ بخش کی طر ف سے خاکسار تحریک پاکستان کے قائد منتخب ہونے پر ڈھوک کھبہ راولپنڈی میں اپنے اعزاز میں منعقدہ تقریب سے خطاب کر رہے تھے – اس موقع پر مقامی شہریوں کے علاوہ سالار شہر محمد سلیم ، سالار ادارہ یاور صد یقی، آغا جاوید صدیقی ،طاہر پرویز، ثناء اللہ اختر ، پذیر احمد،عامر حفیظ ،اخترقریشی، پروفیسر اختر حسین،منیرالدین بھٹی،دانش صد یقی، خالدمحمود،وقاص قدیر،رضوان سلیم، عامر میر ،شہید بھٹی ، احتشام الحق اورخاکساروں کے معاونین کی بڑی تعداد موجود تھی-نثار خان نے کہا خدمت خلق خا کسار تحر یک کا اس کی ابتدہی سے ا صول رہا ہے جو زندہ قوموں کے باشعور افراد کا بھی ہمیشہ سے شعار رہا اور قومی یکجہتی و اتحاد کے لیے اس کو طرزعمل بنانا دینی تعلیمات و معاشرتی ذمہ داریوں کے حوالے سے اہمیت کا حامل ہے – نثار خان نے کہا کہ ملک کو اس وقت کرونا و معاشی مسائل کا بھی سامنا ہے جس میں پر امن و معمول کے حالات ناگزیر ہیں- انہوں نے کہا کہ پاکستان میں ایک اسلامی و فلاحی ریاست کے قیام کے لیے کوششوں کو کامیابی سے ہمکنار کرنے کے لیے شہریوں کو اپنے کر دارر و عمل سے متعلق اسلامی قدار و اعلی روایات کی پیروی کوخود پر لا زم کرنا چاہیی-اس موقع پر سیکریٹری اطلاعات خاکسار تحریک ثناء اللہ اخترنے کہا کہ خاکسار تحر یک نچلی سطح سے قیادت ابھارنے کے لیے کوشاں ہے تاکہ شہری پو رے اعتماد کے ساتھ مقامی ، فوری توجہ طلب و قومی ذمہ داریاں سرانجام دینے کے لیے قابل ہوں-ٖپروفیسر اختر حسین نے کہا کہ مسلمانوں کو دین اسلام پر عمل پیرا ہو کر اپنی صلاحیتوں کو اجاگر کرنا چاہیے تاکہ وہ قومی خدمات سرانجام دینے کے لیے سرگرم عمل ہو سکیں-

متعلقہ عنوان :

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More