The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

مسلم لیگ (ن) کے گلگت بلتستان کے آئندہ انتخابات کیلئے بنائے گئے پارلیمانی بورڈ کا اجلاس … وفاقی حکومت کی جانب سے انتخابات میں مداخلت کو روکنے کیلئے مربوط اور ٹھوس اقدامات … مزید

12

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 16 ستمبر2020ء) مسلم لیگ (ن) کے گلگت بلتستان کے آئندہ انتخابات کیلئے بنائے گئے پارلیمانی بورڈ نے وفاقی حکومت کی جانب سے انتخابات میں مداخلت کو روکنے کیلئے مربوط اور ٹھوس اقدامات اٹھانے کا فیصلہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ آئندہ انتخابات میں مسلم لیگ (ن) اپنی پوری طاقت کیساتھ میدان میں اتریگی ،عوامی مینڈیٹ پر شب خون مارنے کی کسی کو بھی اجازت نہیں دی جائیگی،الیکشن کے تمام مراحل کو وفاقی سطح پر نہایت ہی سنجیدگی سے مانیٹر کیا جائیگا،محمد نواز شریف کے مساوی ترقی کے ویژن کی بدولت گلگت بلتستان ترقی کے نئے دور میں داخل ہو چکا ہے ،انشااللہ (ن)لیگ دوبارہ اقتدار میں آکر گلگت بلتستان میں تعمیر و ترقی کے عمل کو اسی مقام سے آگے بڑھائے گی جہاں عمرانی حکومت نے ترقی کے سفر کو روک رکھا ہے۔

(جاری ہے)

بدھ کو گلگت بلتستان انتخابات کیلئے بنائے گئے مسلم لیگ ن کی پارلیمانی بورڈ کا اہم اجلاس سینٹ میں قائد حزب اختلاف و پارٹی چیئرمین سینٹر راجہ ظفر الحق کے زیر صدارت اسلام آباد میں منعقد ہوا۔ اجلاس میں سابق وزیر اعظم و رکن قومی اسمبلی شاہد خاقان عباسی، مرکزی سکریٹری جنرل مسلم ن و رکن قومی اسمبلی احسن اقبال، اراکین قومی اسمبلی خواجہ محمد آصف،چودھری محمد برجیس طاہر، خرم دستگیر،ایاز صادق، سینٹر پرویز رشید،مریم اورنگزیب، سینٹر مشاہد حسین سید جبکہ گلگت بلتستان سے ممبران پارلیمانی بورڈ سابق وزیر اعلی و صدر مسلم لیگ ن گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمان ، سابق سینئر وزیر و سکریٹری جنرل مسلم لیگ ن گلگت بلتستان حاجی اکبر تابان،صوبائی ترجمان مسلم لیگ ن و چیئرمین قائمہ کمیٹی گلگت بلتستان کونسل محمد اشرف صدا،سابق وزیر قانون گلگت بلتستان اورنگزیب ایڈوکیٹ ، ممبر گلگت بلتستان کونسل ارمان شاہ اور سابق نگران وزیر گلگت بلتستان بشارت اللہ شریک ہوئے ۔اجلاس میں مسلم لیگ (ن) جی بی کے صوبائی صدر حافظ حفیظ الرحمان نے پارلیمانی بورڈ کے وفاقی ممبران کو گلگت بلتستان کے آئندہ انتخابات کے حوالے سے موجودہ صورتحال پر تفصیل سے آگاہ کیا۔ اکبر تابان،اشرف صدا، اورنگزیب ایڈوکیٹ، ارمان شاہ اور بشارت اللہ نے الیکشن کے لیے پارٹی ٹکٹوں کی تقسیم اور حکمت عملی کے حوالے سے اپنی تجاویز پیش کیں۔اجلاس میں اظہار خیال کرتے ہوئے پارلیمانی بورڈ کے وفاقی ممبران نے گلگت بلتستان میں مسلم لیگ ن کی سابق حکومت کی جانب سے صوبے میں امن کی بحالی،تاریخ ساز ترقیاتی عمل اور گڈ گورنس کے حوالے سے اٹھائے گئے ٹھوس اقدامات پر اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے گزشتہ پانچ سالہ حکومت کو گلگت بلتستان کی تاریخ کا سنہرا دور قرار دیا۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ کہ گلگت بلتستان کے آئندہ انتخابات میں مسلم لیگ ن اپنی پوری طاقت کے ساتھ میدان میں اترے گی اور عوامی مینڈیٹ پر شب خون مارنے کی کسی کو بھی اجازت نہیں دے گی،اور الیکشن کے تمام مراحل کو وفاقی سطح پر نہایت ہی سنجیدگی سے مانیٹر کیا جائے گا۔ اجلاس میں گلگت بلتستان کے انتخابات کے حوالے سے کئی اہم فیصلے کئے گئے اور نہائت ہی مربوط حکمت عملی اور ٹھوس اقدامات کو حتمی شکل دی گئی۔اجلاس میں وفاقی حکومت کی گلگت بلتستان کے انتخابات میں مداخلت کو روکنے کے لئے بھی مربوط اور ٹھوس اقدامات اٹھانے کا فیصلہ کیا گیا۔ وفاقی ممبران پارلیمانی بورڈ نے کہا کہ میاں محمد نواز شریف کے پورے پاکستان مساوی ترقی کے ویژن کی بدولت آج گلگت بلتستان ترقی کے نئے دور میں داخل ہو چکا ہے اور انشااللہ مسلم لیگ ن بہت جلد دوبارہ اقتدار میں آکر گلگت بلتستان میں تعمیر و ترقی کے عمل کو اسی مقام سے آگے بڑھائے گی جہاں عمرانی حکومت نے ترقی کے سفر کو روک رکھا ہے۔ گلگت بلتستان کے عوام کی پاکستان کے لیے لازوال قربانیاں دیں ہیں اور یہ صوبہ پاکستان کا اک اہم اور حساس حصہ ہے اور ہم اس خطے کی اہمیت اور حساسیت کا پورا پورا ادراک رکھتے ہوئے اس خطے کے عوامی حقوق کا ضامن بنیں گے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More