The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

قرآن پاک کی بے حرمتی ناقابل برداشت عمل ہے اس عمل سے دنیا بھر کے مسلمانوں کے جذبات مجروع ہوئے ہیں ،اسمبلی اراکین … ملک میں لبرلزم کو فروغ دیکر لا دینیت پھیلائی جارہی ہے … مزید

4

کوئٹہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 14 ستمبر2020ء) بلوچستان اسمبلی کے ارکان نے کہا ہے کہ سویڈن میں قرآن پاک کی بے حرمتی ناقابل برداشت عمل ہے اس عمل سے دنیا بھر کے مسلمانوں کے جذبات مجروع ہوئے ہیں ملک میں لبرلزم کو فروغ دیکر لا دینیت پھیلائی جارہی ہے حکومت اور اقوام متحدہ سویڈن سے قرآن پاک کی بے حرمتی سے متعلق جواب طلبی کریں ۔ یہ بات انہوں نے بلوچستان اسمبلی کے اجلاس میں سویڈن میں قرآن پاک کی بے حرمتی سے متعلق تحریک التواء پر بحث کرتے ہوئے کہی۔ پیر کو اسمبلی کے اجلاس میں 11ستمبر کے اجلاس میں باضابطہ شدہ تحریک التواء پر بحث کا آغاز کرتے ہوئے اپوزیشن لیڈر ملک سکندر خان ایڈووکیٹ نے کہا کہ 30اگست کو خبر آئی کہ سویڈن میں قرآن پاک کو جلایاگیا ہے اس طرح کے واقعات ماضی میںبھی ہوئے ہیں کہ جب حضور اکرم,ؐ کی شان میں گستاخی اور اسلام و قرآن مجید کی توہین کی گئی اس عمل سے مسلمانوں کی غیرت کو للکارا گیا ہے اور ہمارے جذبات سے کھیلا جارہا ہے اقوام متحدہ سمیت تمام عالمی اداروںمیں دین اسلام کو تحفظ حاصل ہے لیکن مغربی ممالک بارہا اسلام کی توہین کررہے ہیں یہ سب کام مسلمانوں کی بزدلی اور مغرب کی تقلید کی وجہ سے ہورہے ہیں زندہ قومیں اپنے دین اور عقیدے کا تحفظ کرتی ہیں آج مسلمان بے حس اور مردہ ہوگئے ہیں ان میں دین کا درد ختم ہوچکا ہے ہونا تو یہ چاہئے تھا کہ پوری دنیا کے مسلمان اکھٹے ہو کر قرآن کی توہین کے خلاف احتجاج کرتے لیکن افسوس کامقام ہے کہ ایسا نہیں ہوسکا انہوںنے کہا کہ اقوام متحدہ سویڈن اور ڈنمارک کو اسلام کی توہین پر سزا دے ساتھ ہی مسلمان بھی بھرپور انداز میں احتجاج کریں انہوںنے کہا کہ اسلام یورپ سمیت دنیا بھر میں تیزی سے پھیل رہا ہے جس سے باطل قوتیں خائف ہیں مغرب کی تقلید میں ہم اندھے ہوچکے ہیں ملک میں لبرل ازم کے نام پر لادینیت کو فروغ دیا جارہا ہے میرا مطالبہ ہے کہ اس حوالے سے مذمتی قرار داد بھی متفقہ طور پر منظور کرکے اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا جائے کہ وہ حضورؐ اور قرآن پاک کی بے حرمتی کرنے والوں کے خلاف کارروائی عمل میں لائے ۔

(جاری ہے)

پشتونخوا ملی عوامی پارٹی کے نصراللہ زیرئے نے کہا کہ توہین آمیز خاکوں اور قرآن کریم کے نسخوں کی بے حرمتی ناقابل برداشت ہے اس طرح کے واقعات سے مسلمانوں کے جذبات کو ٹھیس پہنچتی ہے انہوںنے کہا کہ انتہا ء پسندی او ر فرقہ وارانہ واقعات کی روک تھام کے لئے اقدامات اٹھائے جانے چاہئیں تاکہ آئندہ مسلمانوں کے جذبات مجروح نہ ہوں ۔ بی این پی کے پارلیمانی لیڈر ملک نصیر شاہوانی نے کہا کہ حکومت سویڈن کے سفیر کو وضاحت کے لئے طلب کرے تاکہ آئندہ اس طرح کے واقعات رونما نہ ہوں اس سے قبل نیوزی لینڈ میں ایک جنونی شخص نے مساجد پر حملہ کرکے مسلمانوں کو شہید کیاجس کے خلاف اقوام عالم میں احتجاج کا سلسلہ شروع ہوا اور لوگوں نے اپنے غم و غصے کا اظہار کیا ۔ جے یوآئی کے میر زابد ریکی اور زبیدہ خیر خواہ نے بھی سویڈن میں قرآن پاک کی بے حرمتی کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ اس عمل سے مسلمانوں کے جذبات کو شدید ٹھیس پہنچی ہے وفاقی حکومت اس عمل میں ملوث ممالک کے سفیروں کو بلا کر ان سے جواب طلبی کرے اور اس کے ساتھ ساتھ شدید احتجاج بھی ریکارڈ کرے تاکہ آئندہ اس طرح کے واقعات رونما نہ ہوں اس موقع پر اپوزیشن لیڈر ملک سکندر ایڈووکیٹ نے تجویز دی کہ بحث کو قرار داد کی صورت دے کر منظور کیا جائے تاہم چیئر مین اختر حسین لانگو نے کہا کہ قوانین کے مطابق اس کی اجازت نہیں ہے ملک سکندر ایڈووکیٹ اس پر علیحدہ قرار داد لا سکتے ہیں بعدازاں انہوںنے اسمبلی کا اجلاس جمعرات کی سہ پہر چار بجے تک ملتوی کردیا۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More