The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

فیٹف بل کی منظوری پاکستانی آئینی ترامیم کی فتح ہے … منی لانڈرنگ ، دہشت گردوں کی مالی معاونت کے خلاف ہم نے اہم پیش رفت کی ہے :وفاقی وزیرحماد اظہر

13

منی لانڈرنگ ، دہشت گردوں کی مالی معاونت کے خلاف ہم نے اہم پیش رفت کی ہے :وفاقی وزیرحماد اظہر

Hassan Shabbir حسن شبیر
بدھ ستمبر
22:03

اسلام آباد (اردو پوائنٹ- اخبارتازہ ترین 16 ستمبر2020ء) ایف اے ٹی ایف بل پارلیمان کی منظوری پاکستان میں آئینی ترمیم کی فتح ہے، منی لانڈرنگ کی روک تھام ، دہشت گردوں کی مالی معاونت کو روکنے کے لیے پاکستان تحریک انصاف کی یہ تاریخی اور اہم پیش رفت ہے، میڈیا رپورٹس کے مطابق وفاقی وزیر صنعت و پیداوارحماد اظہرنے پارلیمان میں بلوں کی منظوری کوتاریخی فتح قرار دیا ہے۔خیال رہے کہ فیٹف (ترمیمی) بل 2020 کے مطابق،تفتیشی افسر،عدالت کی اجازت سے ،60 دن میں جدید ترین ٹکنالوجی کا استعمال کرکے، دہشت گردی کی مالی اعانت ، ٹریک مواصلات اور کمپیوٹر سسٹم کا سراغ لگانے کے لئے خفیہ آپریشن کرسکتا ہے۔دریں اثنا ، صدرعارف علوی نے پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں کا مشترکہ اجلاس طلب کیا تھا ان بلوں میں اینٹی منی لانڈرنگ (دوسرا ترمیم) بل، اسلام آباد وقف املاک بل اور انسداد دہشت گردی ایکٹ (ترمیمی) بل، 2020 شامل ہیں،ان سارے معاملات کو پہلے سینیٹ نے مسترد کردیا تھا۔

(جاری ہے)

18 ویں ترمیم کے تحت،اگر پارلیمنٹ کے ایک ایوان سے منظور شدہ بل کو دوسرے کے ذریعہ مسترد کردیا جاتا ہے،تو یہ اس وقت ہی ایک قانون بن سکتا ہے جب وہ دونوں ایوانوں کی مشترکہ نشست سے منظورکریں،اینٹی منی لانڈرنگ اور ا سلام آباد وقف املاک بل سمیت پانچ بلز کے حق میں دو سو اور مخالفت میں ایک سونوے ووٹ پڑے ۔ اجلاس میں اینٹی منی لانڈرنگ ترمیمی بل 2020 کثرت رائے سے منظور ہوا۔اپوزیشن نے پارلیمان میں شوروغل کیا،قائد حزب اختلاف شہباز شریف کا کہنا تھا کہ پارلیمان کی کاروائی غیر آئینی تھی، اپوزیشن نے کاروائی کئے احتجاج میں واک آوٹ کردیا تھا۔جبکہ چئرمین پی پی پی کوپارلیمنٹ میں بولنے کا موقع ہی نہیں دیا گیا تھا۔

متعلقہ عنوان :

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More