The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

غریب عوام کی مشکلات بھی بڑھ رہی ہیں حکومت اپنے اقتدار کو طول دینے کی کشمکش میں لگے ہوئے ہیں، ہاک سرزمین پارٹی

20

حیدرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 17 اکتوبر2020ء) پاک سرزمین پارٹی حیدرآباد ڈویژن کے صدر ندیم قاضی، نائب صدر شعیب جعفری و ارکان ڈویژنل کمیٹی نے اپنے ایک مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ ملک میں بڑھتی ہوئی مہنگائی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں مہنگائی میں روز بروز اضافہ ہورہا ہے جس سے غریب عوام کی مشکلات بھی بڑھ رہی ہیں دونوں حکومتیں اپنے اقتدار کو طول دینے کی کشمکش میں لگے ہوئے ہیں اور عوام کو منافع خوروں کے رحم وکرم پر چھوڑ دیا گیا ہے دوسری طرف حیدرآباد میں آٹا تاریخ کی بلند ترین سطح 70 روپے فی کلو اور انڈے 180 فی درجن جبکہ مرغی گوشت340 اور چینی 105 تک پہنچ چکے ہیں لیکن حکومت سندھ اس جانب کوئی توجہ نہیں اور نہ ہی دینے کو تیار ہیں موجودہ رولر گندم بحران کی ذمہ دار ہے کیونکہ اگر چکی مالکان کو سرکاری گندم جاری کردی جائے تو وہ اوپن مارکیٹ سے بلیک میں مہنگی گندم نہیں خریدیں گے اور اس طرح عوام کو سستا آٹا میسر آسکے گا لیکن گورنمنٹ منافع خوروں کو فائدہ پہنچانے کیلئے سرکاری گندم جاری نہیں کررہی ہے نیز مہنگائی کی وجہ سے غریب آدمی دو وقت کی روٹی کھانا انتہائی مشکل ہوگیا ہے اشیائے خوردو نوش کی قیمتیں ہر گزرتے دن کے ساتھ بڑھتی جارہی ہیں نیز وفاقی حکومت نے تو ہتھیار ڈال دیئے تاحال وزیراعظم عمران خان جب بھی مہنگائی کا نوٹس لیتے ہیں تو ملک میں مہنگائی کا نیا طوفان آجاتا ہے ایسا محسوص ہوتا ہے کہ عمران خان کے نوٹس ہی مہنگائی کی اصل وجہ ہے اور آج تک پی ٹی آئی کی حکومت نے آٹا اور چینی وغیرہ کے ذمہ داران کو کوئی سزا نہیں دی، انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت مہنگائی پر قابو پانے میں مکمل طور پر ناکام ہو چکی ہے مزید اس امر کا اظہار کیا کہ مرکزی حکومت کو چاہیے کہ مہنگائی پر قابو پانے کیلئے زبانی جمع خرچ کے بجائے عملی اقدامات کرے اور منافع خوروں کے خلاف سخت کاروائی کو یقینی بنائے اگر حکومتی لوگ مہنگائی بڑھنے کے ذمہ دار ہیں تو انہیں بھی نشان عبرت بنایا جائے تاکہ مہنگائی کم ہو اور غریب عوام کو ریلیف مل سکے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More