The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

راولپنڈی ،ٹریفک ،ضلعی پولیس کی ملی بھگت ،رات 11 بجے سے قبل ٹرک، ڈمپر ،بڑی گاڑیاں کینٹ میں داخل ہونا شروع ، تاجروں کا اعلی حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ

4

راولپنڈی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 14 ستمبر2020ء) راولپنڈی کی ٹریفک پولیس اور ضلعی پولیس کی ملی بھگت سے رات 11 بجے سے قبل ہی ٹرک، ڈمپر اور بڑی گاڑی راولپنڈی کینٹ میں داخل ہونا شروع ہو گئی ہیں، وقت سے قبل بڑی گاڑیوں کے داخلے کے باعث بھاٹہ چوک سے بکرا منڈی چوک تک ایک سائٹ پر بھاری گاڑیوں کی طویل ترین قطاروں کے باعث تاجروں کے کاروبار متاثر اور ٹریفک جام رہنا معلوم بن گیا۔ تاجر برادری نے الزام عائد کیا ہے کہ پولیس کے جوان مبینہ نذرانے وصول کرکے بھاری ٹریفک کو داخل کراتی ہیں، شہروں اور تاجروں نے اعلیٰ حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق راولپنڈی کینٹ میں ٹریفک جام سے نجات کے لئے سٹی ٹریفک پولیس نے بھاری گاڑیوں کے داخلے کے لئے رات 11بجے کے بعد سے صبح 7بجے تک آمدورفت کی اجازت دے رکھی ہے لیکن مختلف راستوں بلخصوص چشتہ آباد سے براستہ بھاٹہ چوک بھاری گاڑیوں کی لائینیں مغرب کے بعد ہی لگنا شروع ہوجاتیں ہیں اور اسکے ساتھ ہی ایک یک کر کے بڑی گاڑیوں کو رات 11بجے سے قبل ہی داخلے کی اجازت دی جاتی ہے جس سے نہ صرف اہلیان علاقہ بلکہ تاجر برادری سے شدید مشکلات کا شکار ہوگئی ہے ۔

(جاری ہے)

روڈ کی ایک طرف بھاری گاڑیاں پارک ہونے اور بعد ازاں وقت سے قبل کینٹ میں داخل ہونے سے بھاٹہ چوک، چاکرہ، ڈھوک گجراں، آفیسرز کالونی، ڈھوک سیداں مصریال روڈ، بکرا منڈی ، چکری روڈ اور دیگر اردگرد کے علاقوں میں ٹریفک جام معلوم بن گئی ہے۔ ڈھوک سیداں مصریال روڈ کی تاجر برادری کے مطابق مغرب کے بعد بھاری گاڑیوں کی لمبی قطاروں کے باعث ہمارے کاروبار بری طرح متاثر ہورہے ہیں، ضلعی انتظامیہ اور اعلیٰ حکام سے اس معاملے کا نوٹس لینے کا مطالبہ کرتے ہیں۔ ڈھوک سیداں مصریال روڈ کی تاجربرادری نے ٹریفک پولیس اور دیگر متعلقہ حکام کو 72گھنٹوں کا الٹی میٹیم دیتے ہوئے خبر دار کیا ہے کہ اگر متعلقہ اداروں نے ہمارے مطالبے کا نوٹس نہ لیا اور صورتحال کو بہتر کرنے کے لئے عملی اقدام نہ اٹھایا گیا تو احتجاج ڈھوک سیداں مصریال روڈ پر دھرنا دیکر بلاک کر دیں گے، یہ اجتجاجی دھرنا تب تک جاری رہے گا جب تک ٹریفک پولیس اور دیگر متعلقہ ادارے اپنی ذمہ داریاں پوری نہیں کریں گے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More