The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

حکومت نے مریم نواز کو گرفتار کروانے کا عندیہ دے دیا … نواز شریف کی صاحبزادی ضمانت معاملے پر خاتون ہونے کا بھرپور فائدہ اٹھا رہی ہیں، ان کی ضمانت کو چیلنج کرنا چاہیے: شہزاد … مزید

44

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 ستمبر2020ء) حکومت نے مریم نواز کو گرفتار کروانے کا عندیہ دے دیا، شہزاد اکبر کا کہنا ہے کہ نواز شریف کی صاحبزادی ضمانت معاملے پر خاتون ہونے کا بھرپور فائدہ اٹھا رہی ہیں، ان کی ضمانت کو چیلنج کرنا چاہیے۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم کے مشیر داخلہ شہزاد اکبر کا کہنا ہے کہ حکومت کو مریم نواز کی ضمانت چیلنج کرنی چاہیئے۔ مریم نوازنے آج وکٹری اسپیچ دی جس میں کہیں ہمدردری نظر نہیں آئی، مریم نوازنےخود کہا ان کےچچا مفاہمت کی سیاست کرتے ہیں۔ مریم نوازضمانت معاملے پر خاتون ہونےکا بھرپور فائدہ اٹھارہی ہیں، میری نظرمیں مریم نوازکی ضمانت کو چیلنج کرناچاہیے۔ ان کا مزید کہنا ہے کہ مریم نواز نے پریس کانفرنس کے ذریعے بیانیہ کی جنگ میں قدم جمانے کی ناکام کوشش کی، اپنی چوری کو سیاسی بیانیہ کی جانب موڑنے کی کوشش کی جا رہی ہے، مریم نواز نے شہباز شریف کی سیاست کو مفاہمت پر مبنی قرار دے کر ان کی سیاست ختم کر دی۔

(جاری ہے)

مریم نواز نے تاثر دیا کہ شہباز شریف مفاہمت اور وہ مزاحمت کی سیاست کرتی ہیں، مریم اورنگزیب کا اس حوالہ سے بیان توہین عدالت کے زمرے میں آتا ہے۔ نیب نے جون میں شہباز شریف کے وارنٹ گرفتاری جاری کئے تھے۔ نیب کا کیس شہباز شریف اور ان کے گینگ کے خلاف تھا۔ عدالت نے شواہد سامنے رکھ کر ان کی ضمانت مستردکی، اپنے حق میں عدالتوں کا فیصلہ ان کو قبول لیکن شہباز شریف کی منی لانڈرنگ سے متعلق فیصلہ انہیں نامنظورہے۔ وہ صرف اپنی مرضی اور پسند کے فیصلے قبول کرتے ہیں۔انہوں نے کہاکہ مسلم لیگ (ن) پنجاب کی پارٹی ہے ان کا گلگت بلتستان کے انتخابات سے کوئی لینا دینا نہیں۔ شہباز شریف بتائیں کہ وہ گزشتہ 6 ماہ کے دوران کتنی بار گلگت بلتستان گئے اور وہاں جلسے کئے۔شہباز شریف نے منی لانڈرنگ کے ذریعے اثاثے بنائے۔ آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں بار ثبوت ملزم پر ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ شہباز شریف نے دھیلے کی نہیں بلکہ اربوں روپے کی کرپشن کی۔ انہوں نے کہا کہ شہباز شریف اپنے اہلخانہ کے اکائونٹ میں منی لانڈرنگ کا پیسہ منتقل کرنے کیلئے جعلی ٹی ٹیز لگوائیں، یہ جعلی ٹی ٹیز جن عام پاکستانیوں کے نام سے لگوائیں ان میں سے بیشتر انتہائی غریب ہیں اور کبھی بیرون ملک جانے کا تصور بھی نہیں کر سکتے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More