The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

حکومت اور محکمے دوغلی پالیسیوں سے ٹیکس اہداف پورے نہیں کر سکتے‘ پاکستان ٹیکس فورم … ایف بی آر اور صوبائی اتھارٹیز ٹیکس ریٹس اور قوانین کا نفاذ یکساں کریں ‘ چیئرمین … مزید

11

ایف بی آر اور صوبائی اتھارٹیز ٹیکس ریٹس اور قوانین کا نفاذ یکساں کریں ‘ چیئرمین ذوالفقار خان

اتوار اکتوبر
11:20

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 18 اکتوبر2020ء) پاکستان ٹیکس فورم کے چیئرمین ذوالفقار خان نے کہا ہے کہ ملک میں ٹیکس قوانین اور ٹیکس ریٹس یکساں نہ ہونے کی وجہ سے ٹیکس دہندگان کااعتماد مجروح ہو رہا ہے اور ٹیکس کلیکشن میں بھی نمایاں اضافہ نہیں ہو رہا ،پنجاب ریونیو اتھارٹی کے ٹیکس ریٹس کیش پر اور ڈیبٹ کارڈپر اور ہیں یہ تضاد کیوں ہی ۔ان خیالات کا اظہارانہوں نے اپنے دفترمیں ملاقات کیلئے آنے والے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔اس موقع پر صدر لاہور ٹیکس بار علی احسن رانا، عائشہ قاضی ، فیصل اقبال خواجہ ، افتخار شبیر ، عمر اقبال خواجہ، نعیم خان دیگر بھی موجود تھے۔ چیئرمین پاکستان ٹیکس فورم ذوالفقارخان نے کہا کہ اسی طرح ایف بی آر کی جانب سے مختلف سیکٹرز اور کیٹیگری پر مختلف ٹیکس وصولی کی جارہی ہے اوران کے ٹیکس ریٹس میں تضاد پایا جاتا ہے اور یہی وجہ ہے کہ ٹیکس اہداف پورے نہیں ہوتے ۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہا کہ ایف بی آر کو4968ارب اور پنجاب ریونیواتھارٹی کو125 ارب سے ٹیکس اہداف دئیے گئے ہیں جو کہ پورے ہوتے نظر آرہے ہیں۔ دوسرا ٹیکس کلیکٹرز کے رویے اور افسر شاہی ریونیو کلیکشن میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔ جب تک افسران اوپن ڈور پالیسی پر عمل پیر انہیں ہوں گے یہ نظام اور سسٹم بدلا نہیں جا سکتا۔ٹیکس شرح بڑھانے اور ٹیکس قوانین مشکل بنانے سے خوف و ہراس تو پھیل سکتا ہے لیکن ٹیکس بیس اور ٹیکس نیٹ کو نہیں بڑھایا جا سکتا ہے ۔حکومت کورونا باء کے بعد مشکل معاشی حالات میں اگر ٹیکس اہداف کو پورا کرنا چاہتی ہے تو آسانیاں پیدا کرے اور ٹیکس قوانین اور ٹیکس ریٹس کا اطلاق یکساں بنائے۔

متعلقہ عنوان :

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More