The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

حکومت ادارہ برائے علاج و بحالی مریضان منشیات کو تمام بنیادی ضروریات معیاری طرز پر فراہم کررہی ہے‘ میر اسداللہ بلوچ

23

کوئٹہ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – اے پی پی۔ 13 ستمبر2020ء) صوبائی وزیر سماجی بہبو د میر اسداللہ بلوچ نے کہاہے کہ انسانیت کے قاتل اور دولت کے پجا روں نے چند روپوں کی خاطر جس طرح انسانوں کو منشیات کے دلدل میں پھینک کر اُنہیں زندہ لاشوں میں تبدیل کردیا ہے۔ ان کا یہ عمل معاشرتی ،سیاسی اور مذہبی حوالے سے قابل نفرت ہے ۔ حکومت ادارہ برائے علاج و بحالی مریضان منشیات کو تمام بنیادی ضروریات معیاری طرز پر فراہم کررہی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے محکمہ سماجی بہبود کے ادارہ برائے علاج و بحالی مریضان منشیات کے دورے کے دوران کیا ۔اس موقع پر سیکرٹری سماجی بہبو دعبدالروف بلوچ اور ادارے کے دیگر سنیئر آفیسران بھی ان کے ہمراہ تھے ۔ انہوں نے کہا کہ جو درد میر ے دل میں ہے وہ ناقابل بیان ہے اور میں ایسے لوگوں سے نفرت کرتا ہوں جو قتل انسانیت کرتے ہیں ،اور اُن سپاہیوں کو سلام پیش کرتا ہوں۔

(جاری ہے)

جنہوں نے منشیات کے خلاف جہاد کا آغاز کیا ہے اُنہوں نے کہا کہ مجھے نفرت ہے اُن لوگوں سے جو میرے سر زمین کے بچوں اور نوجوانوں کو اس زہر قاتل کا عادی بنارہے ہیں ۔صوبائی وزیر نے اپنے کمیٹمینٹ کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ صوبے میں پہلی مرتبہ بیلا ،پنجگو ار اور لورالائی میں کوئٹہ کے طر زپر تین ادارے زیر تکمیل ہے ۔اور دوسرے مرحلے میں تربت اور چاغی میں اسی طرزکے دو مزید ادارے بنائیں گے ۔ صوبائی وزیر نے معاشرے کے تمام مکتبہ فکر کے افراد ،علماء کرام ،اساتذہ سماجی کارکن طالب علم ،والدین اور سیاسی کارکنان متحد ہوکر اس زہر قاتل کے خلاف جنگ کرے ۔قبل ازیں ادارے کے ایڈ مینسٹریٹر جاوید بلوچ نے صوبائی وزیر کو ادارے کے متعلق اور مسائل کے حوالے سے تفصیلاً بر یفنگ دی ۔صوبائی وزیر نے ادارے کے تمام شعبوں کا معائنہ کیا۔اُنہوں نے ادارے کے علاج اور معالجہ اور بحالی کے اقدامات کومثالی قرار دیا ۔انہوں نے تربیتی مرکز کا بھی دورہ کیا جس میں ٹیلرنگ ،بجلی کاکام ،جوتے بنانے اور تعلیم یافتہ مریضوں کو کمپیوٹر کا عمل جاری تھا۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More