The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

حلیب فوڈز نے تعلیم کو فروغ دینے کے لئے ماسٹر ایوب کو 10لاکھ روپے کی مالی معاونت پیش کردی

9

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 15 ستمبر2020ء) حلیب فوڈز پاکستانمعروف ڈیری اینڈ بیوریج کمپنی نے اپنے معاشرتی ترقیاتی اقدام “Donate to Educate – Agay Barhay Ga Pakistan”کے تحت 10لاکھ روپے کی مالی معاونت فراہم کر دی۔ پسماندہ طبقوں کے بچوں کی مفت تعلیم کے اس مقصد میں، حلیب نے ماسٹر ایوب کے ساتھ شراکت کی تھی۔ پچھلے 30 سالوں سے، ماسٹر ایوب اسلام آباد کے ایک پارک میں کھلے آسمان کے نیچے اسٹریٹ کے بچوں کو مفت میں تعلیم فراہم کررہے ہیں۔ماسٹر ایوب کو اس مقصد کی تائید کے لئے مالی مدد فراہم کرنے کے وعدے کے ساتھ، حلیب نے صارفین کے ذریعہ خریدا گیا فی لیٹر پیکٹ 3 روپے عطیہ کرنے کی مہم شروع کی۔حلیب فوڈز کی جانب سے 10لاکھ روپے کے عطیہ کا مقصد ماسٹر ایوب کے طلبہ کے لیے مناسب تعلیم اور اس سے وابستہ اخراجات کو پورا کرنے میں مدد فراہم کرنا ہے۔

(جاری ہے)

حلیب فوڈز میں کارپوریٹکمیونیکیشن کی سربراہ فرح عاصم نے مزید کہا، “ہمیں پختہ یقین ہے کہ تعلیم یافتہ نوجوان پاکستان کے روشن مستقبل کا وعدہ کرتے ہیں۔

ماسٹر ایوب کے ساتھ ہماری شراکت میںہم نے جو بھی قدم اٹھائے اس پر ہمیں فخر ہے۔ ایک پاکستانی کمپنی ہونے کے ناطے، ہم امید کرتے ہیں کہ ہمارے اس اقدام سے کاروباری اداروں اور دیگرا فراد کو تعلیم کی حمایت کرنے کی ترغیب ملے، پڑھے گا پاکستان تو اگے برھے گا پاکستان ۔”چیک وصول کرتے ہوئے ماسٹر ایوب نے کہا، ”یہ میرے اور ان بچوں کے لئے انتہائی خوشی کا لمحہ ہے جو زمین پر بیٹھے ہیں اور بھی سیکھنے کے خواہشمند ہیں۔ حلیب فوڈز پہلا کاروباری ادارہ ہے جس نے ان 30 سالوں میں مجھ سے اس مقصد کی حمایت کرنے کے مناسب منصوبے کے ساتھ رابطہ کیا جو میرے دل سے انتہائی قریب ہے۔اس شراکت داری پر میں اور تمام بچے انتہائی پر جوش ہیں، کیونکہ ہمارے بچوں کو بااختیار بنانے کا میرا زندگی بھر کا خواب پورا ہوا ہے۔-“ایک غریب گھرانے سے تعلق رکھنے والا، ماسٹر ایوب نے چھوٹی عمر میں ہی اپنے والدین کو کھو دیا۔ تاہم، اپنے 5 بھائیوں اور 3 بہنوں کی پرورش کرنے کی ذمہ داری کے ساتھ پڑھنے کے لئے بہت محنت کی، جو اب سب تعلیم یافتہ ہیں۔ اپنے محدود وسائل سے انہوں نے غریب بچوں کے لئے ایک مفت اسکول بنایا، جہاں وہ انہیں مفت کتابیں اور کاپیاں بھی دیا کرتے تھے۔ کئی دہائیوں کے دوران، ہزاروں بچے قابل احترام روزگار یا کاروبار میں جانے کے لیے اس اسکول میں تعلیم حاصل کر تے رہے ہیں، اس کے ساتھ ساتھ کالجوں اور یونیورسٹیوں میں اعلی تعلیم بھی حاصل کر رہے ہیں۔طلباء اور ان کے والدین نے ماسٹر ایوب سے اظہار تشکر اور دعائیں کیں جنہوں نے ان کی زندگی کو بدلا ہے۔ وہ یقین رکھتے ہیں کہ؛ حلیب کے ساتھ۔ اگے بڑھے گا پاکستان۔ بہت سے طالب علموں کو اپنے عظیم استاد کے نقش قدم پر چلنے کی تحریک ملی ہے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More