The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

بھارت پاکستان میں سنی شیعہ فسادات کا متمنی تھا ،شیخ رشید … ملک میں آگ لگانے کی سازش بے نقاب ہوئی اور لوگ پکڑے گئے ،اے پی سی ناکام ہوگی کسی کے عقیدے کو چھیڑنا نہیں اور اپنے … مزید

7

! راولپنڈی۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – اے پی پی۔ 17 ستمبر2020ء) وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے کہاہے کہ بھارت پاکستان میں سنی شیعہ فسادات کا متمنی تھا ،ملک میں آگ لگانے کی سازش بے نقاب ہوئی اور لوگ پکڑے گئے ،کسی کے عقیدے کو چھیڑنا نہیں اور اپنے عقیدے کو چھوڑنا نہیں ،ایف اے ٹی ایف کے حوالے سے حکومت کی بہت بڑی کامیابی ہے ،حکومت نے زبردست پل عبور کیاہے ،حکومت نے ثابت کیاہے کہ اس نے سودے بازی نہیں کی ،منی لانڈرنگ بل پر سرنڈر نہیں کیا ،نیب کیسز میں جھکائو نہیں کیا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعرات کو ریلوے ہسپتال میں 40کروڑ روپے کی لاگت سے نئے ایمرجنسی بلاک کا سنگ بنیاد رکھنے کی تقریب کے موقع پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہاکہ اپوزیشن نے بہت ہی حساس قسم کے ایف اے ٹی ایف بل کی مخالفت کی ،مجھے امید ہے کہ 20تاریخ کو اپوزیشن اپنے سے بڑا کوئی فیصلہ نہیں کرے گی نہ وہ کرسکتی ہے ،اگر ان کے سینیٹ کے الیکشن میں 64ممبر اس کمرے میں ہوتے ہیں اور اس کمرے میں جاتے ہیں تو وہ 44ہوجاتے ہیں ،کل 38ممبر ان کے کم تھے اور ان کو اتنا رگڑا لگا کہ جو بل نہیں بھی منظور ہونے والے تھے وہ بھی کل حکومت نے کروا لیے ،آج جو لوگ یہ طعنہ دے رہے ہیں کہ جناب کل قانون کو روندا گیا تو کوئی قانون کو نہیں روندا گیا ،تقریر وہی کرسکتا ہے جس نے ترمیم داخل کرائی ہو جس نے ترمیم ہی داخل نہیں کرائی ،شاہد خاقان نے ترمیم داخل کرائی تھی وہ بول سکتا تھا لیکن اس نے بولنے کی بجائے دیگر باتوں پر توجہ دی ،میں آپ کو یقین دلاتا ہوں کہ یہ20ستمبر کو بھی اے پی سی کی کانفرنس جو ہے وہ ناکام ہوگی اور سوائے جلسے اور جلوس کرنے کے علاوہ کچھ نہیں کریں گے ،آج اپنے حلقے میں سب سے حساس بات کہنا چاہتا ہوں ،اس ملک میں انڈین سازش تھی کہ اس ملک میں شیعہ سنی فساد کرایا جائے اور وہ لوگ کچھ پکڑے گئے ہیں جو پاکستان میں راولپنڈی ا سلام آباد کے سنی و شیہ علماء کو شہید کرنا چاہتے تھے ،تاکہ اس ملک میں ایک آگ لگے ،میں اپنے تمام علمائے کرام کو کہنا چاہتا ہوں کہ پنڈی امن کا شہر ہے ہم سب ایک ہیں اور ہمیں نہ کسی کے عقیدے کو چھیڑنا ہے نہ اپنے عقیدے کو چھوڑنا ہے ،سب کا احترام کریں گے ۔

(جاری ہے)

مین لائن ون ( ایم ایل ون ) کے حوالے سے پوچھے گئے ایک سوال کے جواب میں وفاقی وزیر نے کہاکہ ایم ایل ون کا ٹینڈر آئندہ چند یوم میں لگ جائے گا اور 45یوم میں ٹینڈر کھلے گا ،ایم ایل ون سے ایک لاکھ لوگوں کو روزگار ملے گا ،ایک سوال کے جواب میں شیخ رشید احمد نے کہاکہ کوئی ریڈ لائن کرا س نہیں ہوئی ،بلاول اور شہباز دونوں سے میری بات ہوئی ہے ،سب پر با ش ہیں ، شہبا زشریف کا مورال تھوڑا کمزور تھا لیکن کل قومی اسمبلی میں شہبا زشریف نے کوئی ایسی غلط بات نہیں کی بلکہ اس نے اسمبلی اور سپیکر کا بھی پورا احترام کیا اور کل پیپلز پارٹی زیادہ ایکٹو تھی لیکن شام کو میری شہباز اور بلاول دونوں سے ملاقاتیں ہوئیں ،ان شاء اللہ شین نکلے گی کیونکہ شین کا نکلنا طے ہے پنڈی سب سے حساس ہے ایک جانب جی ایچ کیو دسری جانب تمام سفارتخانے ہیں ،راولپنڈی اسلام آباد میں قتل و غارت کی سازش کا منصوبہ تھا جو کہ ناکام بن گیا ہے ملزم پکڑے گئے ہیں اور اس ملک میں شیعی سنی اتحاد قائم ہے اور قائم رہے گا ور کوئی اس کو نقصان نہیں پہنچا سکتا ،میاں نواز شریف کے حوالے سے پوچھے گئے سوال کے جواب میں وفاقی وزیر نے کہاکہ واپس آنے کے لیے نواز شریف میں جرات نہیں ہے ،،بزدل لوگ ہیں یہ ،جیلیں نہیں کاٹ سکتے ،جیل تھوڑا بہت آصف زرداری کاٹ لیتا ہے لیکن ان میں ہمت نہیں ہے ،یہ معافی مانگ کر سعودی عرب جانے والے لوگ ہیں ،اور اب بھی کسی معافی این آر او کی تلاش میں ہیں لیکن کل این آر ا وکو ہمیشہ ہمیشہ کے لیے پاکستان میں دفن کردیا گیاہے ۔قبل ازیں وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ریلوے کے ہسپتالوں اور سکولوں کو نجی شعبے کے حوالے کریں گے ، ریلوے ٹرینوں کی بہتری پر توجہ دے گا ،ماں بچہ ہسپتال پاکستان کا جدید ترین ہاسپیٹل ہوگا ،راولپنڈی میں تیسری یونیورسٹی بھی اس برس بنے گی ،چین کے تعاون سے کیرج فیکٹری میں ایک انٹرنشینل یونیورسٹی بھی بنائیں گے ،گذشتہ 70برس میں کنٹونمنٹ میں کوئی کالج نہیں بنا ،پہلا کالج ہم نے 14برس کے بعد مکمل کیا ،پنڈی کی شناخت تعلیم ہو گی ،کبھی پنڈی کی شناخت منشیات اور جوا ہوا کرتی تھی ،سی ایس ایس میں ٹاپ کرنے والی بچی بھی ایک رکشہ ڈرائیور کی بیٹی تھی اور ڈھوک رتہ سے تعلق رکھتی تھی ،کورونا میں ڈاکٹرز اور طبی عملے نے ناقابل فراموش خدمات سرانجام دیں ،شہریوں سے اپیل کروں گا کہ وہ ماسک کا استعمال ضرور کریں ،کورونا کی وجہ سے بھارت کی 24فی صد معیشت گر گئی ہے ،انڈیاکا تکبر اسے لے ڈوبا ،ہم اپنے سارے ہسپتال نجی شعبے میں دیں گے ہم سے نہیں چلتے ہمارے لیے یہ چلانا بڑا مشکل کام ہے ریلوے منسٹری کو ٹرینوں کی طرف توجہ دینی چاہیے ،ہم ریلوے کے سارے سکول بھی پرائیویٹائز کرنا چاہتے ہیں ،بڑے سکولوں کو اپنی بلڈنگز دیں گے شرط صرف یہ ہے کہ ریلوے مزدوروں کے بچوں کو بھی وہاں تعلیم دی جائے اور ریلوے کے مزدوروں کا بھی مفت علاج ہو۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More