The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

اے این پی کے کارکنان اور ذمہ داران ڈسپلن کا مظاہرہ کرتے ہوئے پارٹی پیغام کو گھر گھر پہنچانے میں اپنا بھرپور کردار ادا کریں، شاہی سید … لاہور موٹروے پر خاتون کے ساتھ جو … مزید

13

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 13 ستمبر2020ء) اے این پی سندھ کے صدر شاہی سید نے اے این پی ضلع کورنگی کے تحت منعقدہ ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ اے این پی کے کارکنان اور زمہ داران ڈسپلن کا مظاہرہ کرتے ہوئے پارٹی پیغام کو گھر گھر پہنچانے میں اپنا بھرپور کردار ادا کریں۔اے این پی جمہوری روایات کی امین سیاسی جماعت ہے،اے این پی نے ہر دور میں عوام کے حقوق کی جنگ لڑی ہے،اے این پی کے کارکنان اور ذمہ داران پارٹی کا سرمایہ ہے،جو بغیر کسی لالچ کے پارٹی سے وابستہ ہیں۔اپنے خطاب میں شاہی سید نے لاہور موٹروے پر ہونے والے افسوس ناک واقع پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ لاہور موٹروے پر خاتون کے ساتھ جو درندگی کا واقعہ ہوا ہے،اس واقعے سے عالمی سطح پر ملک کی جگ ہنسائی ہوئی ہے۔

(جاری ہے)

اس واقعے کی شفاف تحقیقات کے لیے خودمختار جے آئی ٹی کا مطالبہ کرتا ہوں۔مذکورہ واقعے پر سی سی پی او لاہور کا رویہ انتہائی غیرزمہ دارانہ ہے۔

شاہی سید نے کہا کہ کراچی کے تمام شہری اس وقت مسائل کی دلدل میں پھنسے ہوئے ہیں۔شہر کا انفراسٹرکچر تباہ ہوچکا ہے۔وافر مقدار میں پانی ہونے کے باوجود بھی کراچی کے رہنے والے پانی خریدنے پر مجبور ہیں۔شہر کا ٹرانسپورٹ نظام تباہ ہوچکا ہے۔شہر کی سڑکیں کھنڈرات کا منظر پیش کررہی ہے۔کہنے کو تو کراچی شہر روشنیوں کا شہر ہے لیکن افسوس نااہل حکمرانوں نے کراچی شہر کو نہ ختم ہونے والے اندھیروں میں دھکیل دیا ہے۔انہوں نے کہاکہ کراچی شہر میں ہر جگہ کچرے کے پہاڑ نظر آرہے ہیں۔کراچی شہر پورے ملک کو پال رہا ہے لیکن افسوس کراچی کو پالنے والا کوئی نہیں ہے،کراچی کے تمام شہریوں سے اپیل کرتا ہوں کہ آئیںاور ہماری پارٹی کے مثالی ڈسپلن اور قربانی دینے والے کارکنان کا جذبہ دیکھیں۔میں دعوے سے کہتا ہوں کہ اگر کراچی کے شہریوں نے ہمارا ساتھ دیا تو ان شاء اللہ اس شہر کے تمام مسائل حل کرلیںگے۔ہمارا یہ ماننا ہے کہ اس شہر کے مسائل کو مقامی طور پر منتخب کی گئی قیادت ہی بہتر طریقے سے حل کرسکتی ہی کیونکہ مقامی قیادت کو اس شہر کے تمام مسائل کا بخوبی علم ہوتا ہے۔باہر سے مسلط کیئے گئے نمائندوں کو اس شہر کے گلی محلوں کے مسائل کا علم نہیں ہوتا ہے۔شاہی سید نے کہاکہ چھتری کے ذریعے آئی ہوئی قیادت عوامی مسائل کو حل کرنے کے بجائے صرف پروٹوکول کو انجوائے کرتی ہے۔انہوں نے کہاکہ میںعوام سے درخواست کرتا ہوں کہ مستقبل میں کسی بھی ڈسپوزیبل تبدیلی کے جھانسے میں نہ آئیں بلکہ اپنے مسائل کے حل کے لیئے اپنے درمیان سے ہی اپنی قیادت کا انتخاب کریں۔انہوں نے کراچی کے تمام شہریوں کو اپنے مسائل کے حل کے لیئے رنگ، نسل اور زبان کی تفریق سے بالاتر ہوکر سیاسی اتحاد کی دعوت دیتے ہوئے کہاکہ کراچی کے شہریوں سے درخواست کرتا ہوں کہ آئیں اور اپنے مسائل کے حل کے لیئے اے این پی جیسی نظریاتی اور منظم سیاسی تحریک کا حصہ بنیں۔میں دعوے سے کہتا ہوں کہ جس دن کراچی کے شہریوں نے اپنے مسائل کے حل کے لیئے اتحاد اور اتفاق کا مظاہرہ کرتے ہوئے اے این پی کا ساتھ دیاان شاء اللہ اس دن سے اس شہر کے تمام مسائل حل ہونا شروع ہوجائیںگے۔شاہی سید نے کہاکہ23ستمبر کو آرٹس کونسل کراچی میں ہونے والے پختون کلچرل ڈے کے پروگرام میں شہر کے ہر طبقے سے تعلق رکھنے والے شہریوں کو شرکت کی دعوت دیتا ہوںکہ آئیںاور دیکھیںکہ پختون ایک وسیع القلب قوم ہے۔پختون کلچرل میں ہر لسانی اکائی سے تعلق رکھنے والے شہریوں کے لیئے جگہ موجود ہے۔ورکرز کنونشن سے صوبائی قائم مقام جنرل سیکرٹری ثمردین خٹک، ضلع کورنگی کے صدر ناصر خٹک اور دیگر رہنمائوں نے بھی خطاب کیا۔اس موقع پر درجنوں افراد نے مختلف سیاسی پارٹیوں سے مستعفی ہوکر اے این پی میں شمولیت کا اعلان کیا۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More