The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو عبدالرف مہر کالاہور شہر میں قائم ہونے والے تمام سہولت بازاروں کا دورہ

18

اتوار اکتوبر
19:10

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 18 اکتوبر2020ء) ضلعی انتظامیہ لاہور کے افسران فیلڈ میں متحرک ہیں۔ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو عبدالرف مہر ،اسسٹنٹ کمشنر شالیمار مہدی مالوف اور اسسٹنٹ کمشنر رائیونڈ عدنان رشید نے کارروائیاں کیں۔

(جاری ہے)

ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو عبدالرف مہر نے لاہور شہر میں قائم ہونے والے تمام سہولت بازاروں کا دورہ کیا اور انتظامات کا جائزہ لیا.

اشیا ضروریہ کی فراہمی اور ریٹس کو چیک کیا گیا. انہوں نے بھٹہ چوک اور بیگم کوٹ سہولت بازار میں فوری ٹینٹس لگانے کی ہدایت کی ، مکہ کالونی اور بھٹہ چوک سہولت بازار میں سیکرٹری مارکیٹ کمیٹی کو اشیائے ضروریہ کی فوری سپلائی یقینی بنانے کی ہدایت کی گئی ہی. ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو عبدالرف مہر نے ایم او آرز کو شکایات نمبر نمایاں جگہ پر آویزاں کرنے کی ہدایت کی. تاکہ عوام الناس اپنی شکایات کا اندراج کروا سکیں. اسسٹنٹ کمشنر شالیمار مہدی مالوف نے نزد شالامار باغ اور سنگھ پورہ منڈی کا دورہ کیا. شالامار باغ کے قریب 05 فروٹ و سبزی فروخت کرنے والوں کے سامان کو ضبط کر لیا گیا، ریٹ لسٹ آویزاں نہ کرنے پر سامان ضبط کیا گیا. سنگھ پورہ مارکیٹ میں 03 فروٹ و سبزی فروشوں کو گرفتار کر لیا گیا. ریٹ لسٹ نمایاں جگہ پر آویزاں نہ تھی.اسسٹنٹ کمشنر رائیونڈ عدنان رشید نے ماڈل سہولت بازار جوہر ٹان اور مصطفے آباد میں سٹوروں کا دورہ کیا اور اشیا ضروریہ اور آٹا کی دستیابی کا جائزہ لیا، ریٹس کو چیک کیا گیا، مصطفے آباد میں 08 افراد کو گرفتار کر لیا گیا. انہوں نے کہا کہ گوشت، دالوں اور دیگر اشیا ضروریہ کو مہنگے داموں فروخت کرنے پر گرفتار کیا گیا. اے سی رائے ونڈ نے کہا کہ گرفتار افراد کو مصطفے آباد پولیس اسٹیشن بھیج دیا گیا ہی. اسی طرح اسسٹنٹ کمشنر کینٹ مرضیہ سلیم نے بیدیاں چوک پر کاروائی کی. انہوں نے سپر سٹوروں کے دورے کیے اور اشیا ضروریہ کی فراہمی اور سرکاری نرخوں پر عملدرآمد کا جائزہ لیا. اوورچارجنگ پر 15 ہزار روپے جرمانہ اور 03 ایف آئی آر کا اندراج کروایا گیا. 02 دکانوں کو بھی سیل کر دیا گیا.ڈی سی لاہور مدثر ریاض نے سرکاری نرخوں پر عملدرآمد کروانے اور ریٹ لسٹ نمایاں جگہ پر آویزاں کروانے کی سختی سے ہدایات جاری کر رکھی ہیں۔

متعلقہ عنوان :

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More