The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

ایبٹ آباد بچاؤ تحریک نے دو نکاتی ایجنڈہ پر مذاکرات کی یقین دہانی پر دھرنا ختم کردیا

32

ایبٹ آباد۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – اے پی پی۔ 13 ستمبر2020ء) ایبٹ آباد بچاؤ تحریک نے دو نکاتی ایجنڈہ پر مذاکرات کی یقین دہانی پر دھرنا ختم کردیا۔ ڈیڈ لائن کے مطابق مطالبات پورے نہ ہونے پر فوارہ چوک سے شاہراہ ریشم بلاک کی گئی، گھنٹوں ٹریفک جام رہنے سے ملک کے مختلف حصوں کو سفر کرنے والے مسافروں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا،ایبٹ آباد بچاو تحریک کے حوالہ سے سیاسی جماعتوں،جماعت اسلامی ، پیپلز پارٹی،عوامی نیشنل پارٹی، مسلم لیگ ن ،جماعت اہلسنت والجماعت، قومی وطن پارٹی، تحریک لیبک سمیت دیگر مختلف سیاسی پارٹیوں سے تعلق رکھنے والے افراد نے شاھراہ ریشم فوارہ چوک کے مقام پر ھرقسم کی ٹریفک کیلئے بند کیا اور مطالبہ پورا کرنے کے لئے دھرنا دیا۔اتوار کے روز ایبٹ آباد بچاؤتحریک کے چیئرمین سردار فدا حسین نے اپوزیشن جماعتوں کی حمایت سے دو نکاتی ایجنڈہ پر احتجاجی مظاہرہ کیا اس موقع پر نوجوان اور شہری بھی شریک تھے،احتجاجی دھرنا سے قبل مقررین سردار فدا حسین،اسد خان،سید شاہد رضا،سردار آفتاب،امجد خان جدون،ایاز خان،یوسف خان،سابق ناظم سعید مغل،ندیم مغل،نبیل عباسی،سرفراز خان جدون،سردار شاہ نواز،عدیل شیخ اور دیگر نے اپنے خطاب میں کہا کہ کہ ایوب میڈیکل کمپلیکس میں نو افراد کو غفلت سے بصارت سے محروم کیا گیا اور دو مریضوں کی آنکھیں تک نکال لی گئیں لیکن کوئی ٹس سے مس نہ ہوا نہ انتظامیہ حرکت میں آئی، اسی طرح ایبٹ آباد کا6کلو میٹر روڈ کھنڈر میں بدل چکا ہے۔

(جاری ہے)

فوارہ چوک سے پبلک سکول تک سفر عذاب بن چکا ہے جس پر ایبٹ آباد کے عوام اپنے حق کے لئے سڑک پر آئے۔مقررین نے ایبٹ آباد ایوب میڈیکل کمپلیکس کے بورڈ آف گورنر کو تحلیل کرنے،بصارت سے محروم افراد کو مالی تعاون،اور شاہراہ قراقرم کی فوری تعمیر کی یقین دہانی پر احتجاج کیا۔ضلعی انتظامیہ کی جانب سے اسسٹنٹ کمشنر مجتبیٰ بھروانہ ایس ایس پی طارق خان،ڈی ایس ایس پی راجہ محبوب نے ایبٹ آباد بچاؤ تحریک کے مذاکراتی وفد سے مذاکرات کامیاب ہونے پر احتجاج اور دھرنا ختم کیا۔مذاکراتی عمل میں صدر ایبٹ آباد پریس کلب محمد عامر شہزاد جدون،جنرل سیکرٹری راجہ محمد ہارون بھی شریک تھے۔واضح رہے کہ عصر اور مغرب کی نماز کے بعد تک مین شاہراہ قراقرم فوارہ چوک میں دھرنا دینے سے ملک کے دیگر حصوں کو جانے والی ٹریفک بھی تعطل کا شکار ہوئی جس میں خواتین،بچوں،بزرگوں کو بھی مشکلات کا سامنا رہا تاہم مظاہرین نے ہسپتال کو جانے والی ایمبولینس گاڑیوں کی روانی میں رکاوٹ نہیں ڈالی،ایبٹ آباد کے عوام نے اپنے حقوق کے تحفظ کے لئے ایبٹ آباد بچاؤ تحریک کی مکمل حمایت کی ہے۔ادھر ایوب میڈیکل کمپلیکس میں بینائی سے محروم ہونے والے مریضوں کو صوبائی حکومت کی جانب سے مالی معاونت دینے کی یقین دہانی کروائی گئی۔مذاکراتی ٹیم (آج) دن 3بجے ضلعی انتظامیہ سے مذاکرات کرے گی۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More