The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

اپوزیشن کی سیاست کا حشر نشر ہو گیا ہے، اے پی سی تقویت نہیں دے سکے گی، فیٹف قوانین متعین وقت میں منظور نہ ہوتے تو پاکستان بلیک لسٹ ہو جاتا، غیر ملکی سرمایہ کاری ، ترسیلات … مزید

11

لاہور ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – اے پی پی۔ 17 ستمبر2020ء) پاکستان تحریک انصاف کے سینئر مرکزی رہنما ہمایوں اخترخان نے کہا ہے کہ اپوزیشن کو ملکی مفادکتناعزیز ہے فیٹف کی قانون سازی کے موقع پر قوم نے اپنی آنکھوں سے دیکھ لیا ہے، فیٹف قوانین متعین وقت میں منظور نہ ہوتے تو پاکستان بلیک لسٹ ہو جاتا، جب کمیٹی میں بل کی سکروٹنی ہو چکی تھی تو اپوزیشن کو پارلیمان میں اس پر اعتراض نہیں کرناچاہیے تھا۔ جمعرات کے روز اپنے دفتر میں ملاقات کے لئے آنے والے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جہاں ملک و قوم کا مفاد آئے تو اسے ذاتی مفادات پر ترجیح نہیں دی جاسکتی ہے اور ہر قیمت پر ملک و قوم کا مفاد مقدم رکھا جاتا ہے، پاکستان نے فیٹف سے متعلق اقدامات مکمل کرلئے ہیں اوراب ان کی جانچ پڑتال کے بعد فیٹف پاکستان کو گرے لسٹ سے نکال دے گی۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ سوال یہ ہے کہ کیا پاکستان پہلا ملک ہے جس نے فیٹف کے مطابق قانون سازی کی ہے اگر ایسا ہے تو اپوزیشن اسے چیلنج کرے، دنیا میں منی لانڈرنگ کے معاملات میں جس طرح کے قوانین کانفاذ ہے پاکستان بھی اس جانب پیشرفت کر رہا ہے ، پوری قوم نے دیکھا کہ کون سی جماعتیں اس میں رکاوٹ بن رہی ہیں جو” ٹی ٹیز ” کے لئے شہرت رکھتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ فیٹف کے قوانین متعین وقت میں پاس نہ ہوتے تو پاکستان بلیک لسٹ ہو جاتا اوراسے ایک بنانا سٹیٹ قرار دے دیا جاتا، کیا ایسے ملک میں غیر ملکی سرمایہ کاری آ سکتی ہے ، اوور سیز پاکستان میں ترسیلات بھجوا سکتے تھے۔انہوں نے کہا کہ اپوزیشن جماعتیں اپنی سیاست کے لئے اس طرز پر مزاحمت کریں گی اس کا سوچا بھی نہیں جا سکتا ۔ انہوں نے کہا کہ فیٹف قوانین کے حوالے سے اپوزیشن رہنما عوام کو گمراہ کر رہے ہیں، جو حکومت عوام کے ووٹوں سے آئی ہے کیا وہ پاکستان کے آئین کے خلاف کوئی قانون بنا سکتی ہے۔انہوںنے کہا کہ اپوزیشن کی سیاست کا حشر نشر ہو گیا ہے اور اے پی سی انہیں تقویت نہیں دے سکے گی۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More