The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

الحشد الشعبی کے حامیوں کے ہاتھوں کرد ڈیموکریٹک پارٹی کا دفتر نذر آتش … شیعہ ملیشیا الحشد الشعبی کے متعدد حامیوں اور ہمنوا افراد نے کردستان ڈیموکریٹک پارٹی کے دفتر کو … مزید

10

شیعہ ملیشیا الحشد الشعبی کے متعدد حامیوں اور ہمنوا افراد نے کردستان ڈیموکریٹک پارٹی کے دفتر کو آگ لگا دی

اتوار اکتوبر
12:15

بغداد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 18 اکتوبر2020ء) عراقی دارالحکومت بغداد میں اس وقت ہنگامہ آرائی دیکھی گئی جب شیعہ ملیشیا الحشد الشعبی کے متعدد حامیوں اور ہمنوا افراد نے کردستان ڈیموکریٹک پارٹی کے دفتر کو آگ لگا دی۔میڈیارپورٹس کے مطابق مذکورہ پارٹی کے رہ نما ہوشیار زیباری کے ایک بیان پر رد عمل کا اظہار کرنے کے لیے درجنوں افراد بغداد کے وسط میں واقع کردستان ڈیموکریٹک پارٹی کے ذیلی دفتر کی جانب نکل پڑے۔ یہ افراد زیباری کے حالیہ بیان کی مذمت میں نعرے لگا رہے تھے جب کہ احتجاجیوں نے پارٹی کے دفتر کا فرنیچر توڑ پھوڑ دیا اور وہاں آگ لگا دی۔ادھر مقامی میڈیا کے مطابق الحشد الشعبی ملیشیا کے مقرب عناصر سماجی ذرائع ابلاغ پر ایسی وڈیو ریکارڈنگز کو گردش میں لائے جن میں بسوں میں سوار سیاہ لباس پہنے افراد کو بغداد کے علاقے الکرادہ میں کرد پارٹی کے دفتر کے نزدیک اترتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے بعد ازاں ان افراد نے علاقے میں اسٹریٹ 42 کو بند کر دیا اور الحشد الشعبی کی حمایت اور ہوشیار زیباری کے بیان کی مذمت میں پر زور نعرے بازی کی۔

(جاری ہے)

یاد رہے کہ کردستان ڈیموکریٹک پارٹی کے رہ نما اور سابق عراقی وزیر خارجہ ہوشیار زیباری نے چند روز قبل ایک ٹی وی انٹرویو میں مطالبہ کیا تھا کہ بغداد میں گرین زون کے حساس ترین علاقے کو الحشد الشعبی ملیشیا کے گروپوں سے پاک کیا جائے۔ اس بیان نے الحشد الشعبی ملیشیا کو چراغ پا کر دیا۔ یہاں تک کہ پارلیمنٹ کے اندر الحشد الشعبی کے حامی ارکان اور کرد ارکان کے درمیان جھگڑا بھی دیکھنے میں آیا۔

متعلقہ عنوان :

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More