The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی سرعام پھانسی کی حمایت … مجرموں کو سرعام پھانسی کے لیے قانونی سقم دور کئے جائیں، اسپیکر قومی اسمبلی اسدقیصر

9


Live Updates

مجرموں کو سرعام پھانسی کے لیے قانونی سقم دور کئے جائیں، اسپیکر قومی اسمبلی اسدقیصر

Hassan Shabbir حسن شبیر
بدھ ستمبر
21:26

اسلام آباد (اردو پوائنٹ- اخبارتازہ ترین 16 ستمبر2020ء) اسپیکرقومی اسمبلی اسد قیصر کا کہنا ہے کہ ملک میں پھانسی مجرموں کو سرعام پھانسی نہیں ہوگی تو معاملہ حل نہیں ہوگا،قانون میں موجود سقم کو دور کرنے کی ضرورت ہے ، سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پراپنے ایک پیغام میں کہا کہ پھانسی کی سزا ہی جنسی جرائم میں کمی کا پیش خیمہ ہو سکتی ہے ،مجرموں کو سرعام پھانسی دینی چاہیے،جس سے معاملات حل ہوں گے،قانون میں سقم دور کیے جائیں۔

(جاری ہے)

خیال رہے کہ بدھ کے روز قومی اسمبلی کے مشترکہ اجلاس میں وزیر اعظم عمران خان نے نے جنسی جرائم بل جلد پیش کرنے کا بھی کہا ہے ،زیادتی کیس کے ملزم درندہ صفت انسان ہیں، ملزمان کئی  ریپ کیسز میں ملوث ہوتے ہیں لیکن ملزم کو قانون کی گرفت میں رکھنے کے لیے کوئی خاطر خواہ قانون نظر نہیں آتا ہے،اگرقانون موجود ہیں تو پولیس کی گرفت کمزورہوتی ہے،انھوں نے کہا کہ ہم عبرت ناک سزائیں دینے کے لیے بل تیار کررہے جو جلد ہم ایوان میں پش کریں گے، جنسی جرائم بل سے ملک میں بچوں اورخواتین کے ساتھ ہونے والی زیادتیوں کی روک تھام کے لیے اہم پیش رفت ہوگی ، انھوں نے کہا کہ قانون میں گواہوں کے لیے بھی تحفظ کو یقینی بنایا جائے گآ، جبکہ عینی شاہدین اور گواہوں کی گواہی کے لیے بھی اہم پیش رفت کی جائے گی اور گواہی کے لیے بھی قانون میں بہتری لائے جائےگی،ملزم گواہ نہ ہونے کی وجہ سے بھی بری ہو جاتے ہیں خیال رہے کہ سانحہ موٹروے زیادتی کیس میں وزیراعظؐم عمران خان نے بھی نوٹس لیا تھا،اورملزمان کو سرعام پھانسی دینے اورملزمان کو کیمائی مواد سے نامرد کرنےکے حق میں بیان دے چکے ہیں،جس کی مخالفت کئی انسانی حقوق کی تنظیموں نےکی تھی جبکہ پی پی پی سمیت کئی سیاسی جماعتیں بھی ایسی سزاوں کے خلاف ہیں۔



موٹروے پر خاتون کے ساتھ زیادتی سے متعلق تازہ ترین معلومات

متعلقہ عنوان :

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More