The Pakistan Post
Daily News Publishing Portal

اسماعیل ھنیہ کا جدید ترین میزائل کے کامیاب تجربے کا دعوی … فلسطینی مزاحمتی قوتیں دشمن کے خلاف ہرمحاذ پر لڑنے کی صلاحیت رکھتی ہیں،حماس رہنماء کا انٹرویو

3

فلسطینی مزاحمتی قوتیں دشمن کے خلاف ہرمحاذ پر لڑنے کی صلاحیت رکھتی ہیں،حماس رہنماء کا انٹرویو

اتوار ستمبر
16:40

بیروت(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین – این این آئی۔ 13 ستمبر2020ء) اسلامی تحریک مزاحمت حماس کے سیاسی شعبے کے سربراہ اسماعیل ھنیہ نے انکشاف کیا ہے کہ جولائی کے پہلے ہفتے میں جس روز اسرائیل نے مقبوضہ مغربی کنارے کیالحاق کا اعلان کیا۔ اسی روز ہم نے صہیونی دشمن کو یہ پیغام دینے کے لیے کہ ہم دشمن کو منہ توڑ جواب دینے کی صلاحیت رکھتے ہیں ایک جدید ترین میزائل کا کامیاب تجربہ کیا تھا۔میڈیارپورٹس کے مطابق ایک انٹرویو میں اسماعیل ھنیہ نے کہاکہ ہم نے صہیونی دشمن کویہ پیغام دیا کہ فلسطینی مزاحمتی قوتیں دشمن کے خلاف ہرمحاذ پر لڑنے کی صلاحیت رکھتی ہیں اور مزاحمت جاری رکھنے کے لیے پرعزم ہیں۔انہوں نے کہا کہ القسام بریگیڈ اور دوسرے عسکری بازوغرب اردن کے اسرائیل سے الحاق کے اعلان کو اعلان جنگ قرار دیتے ہیں۔

(جاری ہے)

یہی وجہ ہے کہ ہم ہم نے جولائی کے اوائل میں جدید ترین میزائل کا تجربہ کرکے دشمن کو پیغام بھیجا کہ ہم فلسطین کی آزادی کے لیے ہرسطح پر لڑنے کے لیے تیار ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ہم الحاق کے نام نہاد اسرائیلی اعلان کے جواب میں صرف سیمینار نہیں کررہے۔ ہم اپنے مقدسات کے دفاع اور وطن کی آزادی کے لیے بارود اور آتشیں اسلحہ کا بھی استعمال کرنا جانتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ غرب اردن کا الحاق امارات کے اسرائیل سے معاہدے کے ذریعے نہیں روکا گیا بلکہ فلسطینی قوم کی مزاحمت نے اسرائیل کو مجبور کیا ہے۔حماس رہ نما کا کہنا تھا کہ اسرائیل کے ساتھ دوستانہ مراسم کا قیام ناقابل معافی جرم ہے۔

متعلقہ عنوان :

Leave A Reply

Your email address will not be published.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More